Welcome to Funday Urdu Forum

Guest Image

Welcome to Funday Urdu Forum, like most online communities you must register to view or post in our community, but don't worry this is a simple free process that requires minimal information for you to signup. Be apart of Funday Urdu Forum by signing in or creating an account via default Sign up page or social links such as: Facebook, Twitter or Google.

  • Start new topics and reply to others
  • Subscribe to topics and forums to get email updates
  • Get your own profile page and make new friends
  • Send personal messages to other members.
  • Upload or Download IPS Community files such as:  Applications, Plugins etc.
  • Upload or Download your Favorite Books, Novels in PDF format. 

waqas dar

poetry
غیر کے چاک گریباں کو بھی ٹانکا کیجے

Rate this topic

1 post in this topic

ghalat sare.jpgغیر کے چاک گریباں کو بھی ٹانکا کیجے
اور کچھ اپنے گریباں میں بھی جھانکا کیجے

بن کے منصف جو کٹہروں میں بلائیں سب کو
اس ترازو میں ذرا خود کو بھی جانچا کیجے

خود میں دعویٰ جو بڑائی کا لئے پھرتے ہیں
یہ بھی فتنہ ہے ذرا اس کو بھی چلتا کیجے

سب کو دیتے ہیں سبق آپ بھلے کاموں کا
پہلے اس فن میں ذرا خود کو تو یکتا کیجے

راستی پر ہیں فقط آپ غلط ہیں سارے
اس تعصب میں حقیقت کو نہ دھندلا کیجے

ہے توقع کہ محبت سے سبھی پیش آئیں
خود محبت سے کوئی ایک تو اپنا کیجے

اور کے نقص پہ جو اُگلے زباں تیری زہر
اپنے حصے کا ذرا زہر بھی پھانکا کیجے

برہمی ٹھیک ہے جاہل کی جہالت پہ مگر
علم حاضر ہے ذرا خود کو تو بینا کیجے

کاہے ابرک ہے گلہ رات کی تاریکی کا
آپ کا کام ہے لفظوں سے اجالا کیجے
اتباف ابرک

Share this post


Link to post
Share on other sites

Create an account or sign in to comment

You need to be a member in order to leave a comment

Create an account

Sign up for a new account in our community. It's easy!


Register a new account

Sign in

Already have an account? Sign in here.


Sign In Now

  • Recently Browsing   0 members

    No registered users viewing this page.

  • Forum Statistics

    1,731
    Total Topics
    7,679
    Total Posts