News Ticker
  • “We cannot expect people to have respect for law and order until we teach respect to those we have entrusted to enforce those laws.” ― Hunter S. Thompson
  • “And I can fight only for something that I love
  • love only what I respect
  • and respect only what I at least know.” ― Adolf Hitler
  •  Click Here To Watch Latest Movie Jumanji (2017) 

Welcome to Funday Urdu Forum

Guest Image

Welcome to Funday Urdu Forum, like most online communities you must register to view or post in our community, but don't worry this is a simple free process that requires minimal information for you to signup. Be apart of Funday Urdu Forum by signing in or creating an account via default Sign up page or social links such as: Facebook, Twitter or Google.

  • Start new topics and reply to others
  • Subscribe to topics and forums to get email updates
  • Get your own profile page and make new friends
  • Send personal messages to other members.
  • Upload or Download IPS Community files such as:  Applications, Plugins etc.
  • Upload or Download your Favorite Books, Novels in PDF format. 

  • Radio

    Live Radio

Rate this topic

18 posts in this topic

دیکھیے لاتی ہے اس شوخ کی نخوت کیا رنگ
 اس کی ہر بات پہ ہم ‘نام خدا‘ کہتے ہیں
غالب

3 people like this

Share this post


Link to post
Share on other sites
2 people like this

Share this post


Link to post
Share on other sites

Bohaaat awalaaaa @Zarnish Ali

2 people like this

Share this post


Link to post
Share on other sites

@waqas dar thankx

2 people like this

Share this post


Link to post
Share on other sites

جمع کرتے ہو کیوں رقیبوں کو
 اک تماشا ہوا‘ گلہ نہ ہوا
غالب

2 people like this

Share this post


Link to post
Share on other sites

یہ مسائل تصوف‘ یہ ترا بیان غالب
 تجھے ہم ولی سمجھتے‘ جو نہ بادہ خوار ہوتا
غالب

ڈھانپا کفن نے داغ عیوب برہنگی
 میں ورنہ ہر لباس میں ننگ وجود تھا
غالب

2 people like this

Share this post


Link to post
Share on other sites

:lajawab: 

 

:umdaa:  Very Nice .  :bookslove: 

 

(y)(y)

1 person likes this

Share this post


Link to post
Share on other sites

ہر ایک بات پہ کہتے ہو تم کہ تو کیا ہے
تمہیں کہو کہ یہ اندازِ گفتگو کیا ہے
نہ شعلے میں یہ کرشمہ نہ برق میں یہ ادا
کوئی بتاؤ کہ وہ شوخِ تند خو کیا ہے
یہ رشک ہے کہ وہ ہوتا ہے ہم سخن تم سے
وگرنہ خوفِ بد آموزی ِ عدو کیا ہے
چپک رہا ہے بدن پر لہو سے پیراہن
ہمارے جَیب کو اب حاجتِ رفو کیا ہے
جلا ہے جسم جہاں، دل بھی جل گیا ہوگا
کریدتے ہو جو اب راکھ جستجو کیا ہے
رگوں میں دوڑتے پھرنے کے ہم نہیں قائل
جب آنکھ سے ہی نہ ٹپکا تو پھر لہو کیا ہے
وہ چیز جس کے لیے ہم کو ہو بہشت عزیز
سواۓ بادۂ ِ گلفامِ مشک بو کیا ہے
پیوں شراب اگر خم بھی دیکھ لوں دو چار
یہ شیشہ و قدح و کوزہ و سبو کیا ہے
رہی نہ طاقتِ گفتار اور اگر ہو بھی
تو کس امید پہ کہیے کہ آرزو کیا ہے
ہوا ہے شہ کا مصاحب پھرے ہے اتراتا
وگرنہ شہر میں غالب کی آبرو کیا ہے
مرزا اسداللہ غالب
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

2 people like this

Share this post


Link to post
Share on other sites

Create an account or sign in to comment

You need to be a member in order to leave a comment

Create an account

Sign up for a new account in our community. It's easy!


Register a new account

Sign in

Already have an account? Sign in here.


Sign In Now

  • Recently Browsing   0 members

    No registered users viewing this page.

  • Forum Statistics

    1,772
    Total Topics
    7,776
    Total Posts