Jump to content

Welcome to Fundayforum. Please register your ID or get login for more access and fun.

Signup  Or  Login

house fdf.png

ADMIN ADMIN

waqas dar

Administrators
  • Content Count

    11,473
  • Joined

  • Last visited

  • Days Won

    487
  • Points

    13,260 [ Donate ]

waqas dar last won the day on June 11

waqas dar had the most liked content!

Community Reputation

7,271 VIP Hero

About waqas dar

  • Rank
    Ishq Hy Ishq Sy !!!
  • Birthday March 8

Profile Information

  • Gender
    Male
  • Interests
    Chess, Sleeping, Coofee Latte, Poetry, History, Movies,
  • Location
    Pakistan

Contact Methods

Profile Fields

  • ZODIAC
    Pisces

Recent Profile Visitors

70,519 profile views

Single Status Update

See all updates by waqas dar

  1. زمانے بھر کو اداس کر کے
    خوشی کا ستیا ناس کر کے
    میرے رقیبوں کو خاص کر کے
    بہت ہی دوری سے پاس کر کے
    تمہیں یہ لگتا تھا
    جانے دیں گے ؟
    سبھی کو جا کے ہماری باتیں
    بتاؤ گے اور
    بتانے دیں گے ؟
    تم ہم سے ہٹ کر وصالِ ہجراں
    مناؤ گے اور
    منانے دیں گے ؟
    میری نظم کو نیلام کر کے
    کماؤ گے اور
    کمانے دیں گے ؟

    تو جاناں سن لو
    اذیتوں کا ترانہ سن لو

    کہ اب کوئی سا بھی حال دو تم
    بھلے ہی دل سے نکال دو تم
    کمال دو یا زوال دو تم
    یا میری گندی مثال دو تم

    میں پھر بھی جاناں ۔۔۔۔۔۔۔!
    میں پھر بھی جاناں ۔۔۔
    پڑا ہوا ہوں ، پڑا رہوں گا
    گڑا ہوا ہوں ، گڑا رہوں گا
    اب ہاتھ کاٹو یا پاؤں کاٹو
    میں پھر بھی جاناں کھڑا رہوں گا

    بتاؤں تم کو ؟
    میں کیا کروں گا ؟

    میں اب زخم کو زبان دوں گا
    میں اب اذیت کو شان دوں گا
    میں اب سنبھالوں گا ہجر والے
    میں اب سبھی کو مکان دوں گا
    میں اب بلاؤں گا سارے قاصد
    میں اب جلاؤں گا سارے حاسد
    میں اب تفرقے کو چیر کر پھر
    میں اب مٹاؤں گا سارے فاسد
    میں اب نکالوں گا سارا غصہ
    میں اب اجاڑوں گا تیرا حصہ
    میں اب اٹھاؤں گا سارے پردے
    میں اب بتاؤں گا تیرا قصہ

    مزید سُن لو۔۔۔

    میں اب نظم کا سہارا لوں گا
    میں ہر ظلم کا کفارہ لوں گا
    اگر تو جلتا ہے شاعری سے
    تو یہ مزہ میں دوبارہ لوں گا

    میں اتنی سختی سے کھو گیا ہوں
    کہ اب سبھی کا میں ہو گیا ہوں
    کوئی بھی مجھ سا نہی ملا جب
    خود اپنے قدموں میں سو گیا ہوں

    میں اب اذیت کا پیر ہوں جی
    میں عاشقوں کا فقیر ہوں جی
    کبھی میں حیدر کبھی علی ہوں
    جو بھی ہوں اب اخیر ہوں جی

    جون ایلیا

  • Recently Browsing   0 members

    No registered users viewing this page.

×