Jump to content

Search the Community

Showing results for tags 'چاندنی'.



More search options

  • Search By Tags

    Type tags separated by commas.
  • Search By Author

Content Type


Forums

  • Help Support
    • Announcement And Help
    • Funday Chatroom
  • Poetry
    • Shair-o-Shaa'eri
    • Famous Poet
  • Islam - اسلام
    • QURAN O TARJUMA قرآن و ترجمہ
    • AHADEES MUBARIK آحدیث مبارک
    • Ramazan ul Mubarik - رمضان المبارک
    • Deen O Duniya - دین و دنیا
  • Other Forums
    • Quizzes
    • Chitchat and Greetings
    • Urdu Adab
    • Entertainment
    • Common Rooms
  • Science, Arts & Culture
    • Education, Science & Technology
  • IPS Community Suite
    • IPS Community Suite 4.1
    • IPS Download
    • IPS Community Help/Support And Tutorials

Blogs

There are no results to display.

There are no results to display.

Categories

  • IPS Community Suite 4.3
    • Applications 4.3
    • Plugins 4.3
    • Themes 4.3
    • Language Packs 4.3
    • IPS Extras 4.3
  • IPS Community Suite 4
    • Applications
    • Plugins
    • Themes
    • Language Packs
    • IPS Extras
  • Books
    • Urdu Novels
    • Islamic
    • General Books
  • XenForo
    • Add-ons
    • Styles
    • Language Packs
    • Miscellaneous XML Files
  • Web Scripts
  • PC Softwares

Find results in...

Find results that contain...


Date Created

  • Start

    End


Last Updated

  • Start

    End


Filter by number of...

Joined

  • Start

    End


Group


Facebook ID


FB Page/Group URL


Bigo Live


Website URL


Instagram


Skype


Location


Interests

Found 2 results

  1. چاندنی شب ہے ستاروں کی ردائیں سی لو عید آئی ہے بہاروں کی ردائیں سی لو چشم ساقی سے کہو تشنہ اُمیدوں کے لیے تُم بھی کچھ بادہ گُساروں کی ردائیں سی لو ہر برس سوزن تقدیر چلا کرتی ہے اب تو کُچھ سینہ فگاروں کی ردائیں سی لو لوگ کہتے ہیں تقدس کے سُبو ٹوٹیں گے جُھومتی رہگزاروں کی ردائیں سی لو قلرم خُلد سے ساغر کی صدا آتی ہے اپنے بے تاب کناروں کی ردائیں سی لو (ساغر صدیقی)
  2. چاندنی شب ہے ستاروں کی ردائیں سی لو عید آئی ہے بہاروں کی ردائیں سی لو چشم ساقی سے کہو تشنہ اُمیدوں کے لیے تُم بھی کچھ بادہ گُساروں کی ردائیں سی لو ہر برس سوزن تقدیر چلا کرتی ہے اب تو کُچھ سینہ فگاروں کی ردائیں سی لو لوگ کہتے ہیں تقدس کے سُبو ٹوٹیں گے جُھومتی رہگزاروں کی ردائیں سی لو قلرم خُلد سے ساغر کی صدا آتی ہے اپنے بے تاب کناروں کی ردائیں سی لو (ساغر صدیقی)
×