Jump to content
Search In
  • More options...
Find results that contain...
Find results in...

Welcome to Fundayforum.com

Take a moment to join us, we are waiting for you.

Search the Community

Showing results for tags 'کیسے'.



More search options

  • Search By Tags

    Type tags separated by commas.
  • Search By Author

Content Type


Forums

  • Help Support
    • Announcement And Help
    • Funday Chatroom
  • Poetry
    • Shair-o-Shaa'eri
    • Famous Poet
  • Islam - اسلام
    • QURAN O TARJUMA قرآن و ترجمہ
    • AHADEES MUBARIK آحدیث مبارک
    • Ramazan ul Mubarik - رمضان المبارک
    • Deen O Duniya - دین و دنیا
  • Other Forums
    • Quizzes
    • Chitchat and Greetings
    • Urdu Adab
    • Entertainment
    • Common Rooms
  • Science, Arts & Culture
    • Education, Science & Technology
  • IPS Community Suite
    • IPS Community Suite 4.1
    • IPS Download
    • IPS Community Help/Support And Tutorials

Blogs

There are no results to display.

There are no results to display.

Categories

  • IPS Community Suite 4.3
    • Applications 4.3
    • Plugins 4.3
    • Themes 4.3
    • Language Packs 4.3
    • IPS Extras 4.3
  • IPS Community Suite 4
    • Applications
    • Plugins
    • Themes
    • Language Packs
    • IPS Extras
  • Books
    • Urdu Novels
    • Islamic
    • General Books
  • XenForo
    • Add-ons
    • Styles
    • Language Packs
    • Miscellaneous XML Files
  • Web Scripts
  • PC Softwares

Find results in...

Find results that contain...


Date Created

  • Start

    End


Last Updated

  • Start

    End


Filter by number of...

Joined

  • Start

    End


Group


Facebook ID


FB Page/Group URL


Bigo Live


Website URL


Instagram


Skype


Location


Interests

Found 5 results

  1. جان ملوک جہی تے جھلاں، کیسے کیسے قہراں نوں۔ جنم دہاڑا تیرا ہووے، تحفے ونڈاں غیراں نوں۔ ،ساڈے ورگی ہی کوجھی ہے، قسمت ساڈے پنڈاں دی جہڑا بندہ پڑھ جاندا ہے، تر جاندا ہے شہراں نوں۔ ،کی سمجھاں برہا نے اس نوں، کی کی اگاں لائیاں نے تپش ہجر دی ٹھنڈھی کردا، پھردا سخر دپہراں نوں۔ ،ایہہ وی ہوکے. ہاواں. لگن جل وچ وسدے جیواں دے جد وی کنڈھے بہ کے دیکھاں، اچیاں اچیاں لہراں نوں۔ ،اوہ وی مینوں تکّ رہی سی، حسرت بھریاں نظراں نال میتھوں وی نہ ٹھلاں پئیاں، اکھوں وگیاں نہراں نوں۔ ،کاہنوں سر تے چکی پھردا، بوجھل پنڈ عذاباں دی منگ حیاتی دے وچ لیندی، جے اوہ میتھوں مہراں نوں۔ ،اوکھ نہیں ہے تینوں کوئی، سارے لوکی جانن 'نور' پھیر بھلا کیوں ہتھ نہیں تونہہ، پاؤندا دھکڑ بحراں نوں۔ نور محمد نور
  2. کیسے چھوڑیں اُسے تنہائی پر حرف آتا ہے مسیحائی پر اُس کی شہرت بھی تو پھیلی ہر سُو پیار آنے لگا رُسوائی پر ٹھہرتی ہی نہیں آنکھیں ، جاناں ! تیری تصویر کی زیبائی پر رشک آیا ہے بہت حُسن کو بھی قامتِ عشق کی رعنائی پر سطح سے دیکھ کے اندازے لگیں آنکھ جاتی نہیں گہرائی پر ذکر آئے گا جہاں بھونروں کا بات ہو گی مرے ہرجائی پر خود کو خوشبو کے حوالے کر دیں پُھول کی طرز پذیرائی پر پروین شاکر
  3. دیار غیر میں کیسے تجھے سدا دیتے تو مل بھی جاتا تو آخر تجھے گنوا دیتے تمہی نے نہ سنایا اپنا دکھ ورنہ دعا وہ دیتے کہ آسماں ہلا دیتے وہ تیرا غم تھا کہ تاثیر میرے لہجے کی کہ جسے حال سناتے اُسے رولا دیتے ہمیں یہ زعم تھا کہ اب کہ وہ پکاریں گے انہیں یہ ضد تھی کہ ہر بار ہم صدا دیتے تمھیں بھلانا اول تو دسترس میں نہیں گر اختیار میں ہوتا تو کیا بھلا دیتے؟ سماعتوں کو میں تاعمر کوستا رہا وصی وہ کچھ نہ کہتے مگر لب تو ہلا دیتے وصی شاہ
  4. ٹوٹ جائے نہ بھرم ہونٹ ہلاؤں کیسے حال جیسا بھی ہے لوگوں کو سناؤں کیسے ﺧﺸﮏ ﺁﻧﮑﮭﻮﮞ ﺳﮯ ﺑﮭﯽ ﺍﺷﮑﻮﮞ ﮐﯽ ﻣﮩﮏ ﺁﺗﯽ ﮨﮯ ﻣﯿﮟ ﺗﯿﺮﮮ ﻏﻢ ﮐﻮ ﺯﻣﺎﻧﮯ ﺳﮯ ﭼﮭﭙﺎﺅﮞ ﮐﯿﺴﮯ ﺗﯿﺮﯼ ﺻﻮﺭﺕ ﮨﯽ ﻣﯿﺮﯼ ﺁﻧﮑﮫ ﮐﺎ ﺳﺮﻣﺎﯾﮧ ﮨﮯ ﺗﯿﺮﮮ ﭼﮩﺮﮮ ﺳﮯ ﻧﮕﺎﮨﻮﮞ ﮐﻮ ﮨﭩﺎﺅﮞ ﮐﯿﺴﮯ ﺗﻮ ﮨﯽ ﺑﺘﻼ ﻣﯿﺮﯼ ﯾﺎﺩﻭﮞ ﮐﻮ ﺑﮭﻼﻧﮯ ﻭﺍﻟﮯ ﻣﯿﮟ ﺗﯿﺮﯼ ﯾﺎﺩ ﮐﻮ ﺍﺱ ﺩﻝ ﺳﮯ ﺑﮭﻼﺅﮞ ﮐﯿﺴﮯ ﭘﮭﻮﻝ ﮨﻮﺗﺎ ﺗﻮ ﺗﯿﺮﮮ ﺩﺭ ﭘﮧ ﺳﺠﺎ ﺑﮭﯽ ﺭﮨﺘﺎ ﺯﺧﻢ ﻟﮯ ﮐﺮ ﺗﯿﺮﯼ ﺩﮨﻠﯿﺰ ﭘﮧ ﺁﺅﮞ ﮐﯿﺴﮯ آئینہ ماند پڑے سانس بھی لینے سے اتنا نازک ہو تعلق تو نبھاؤں کیسے ﻭﮦ ﺭﻻﺗﺎ ﮨﮯ ﺭﻻﺋﮯ ﻣﺠﮭﮯ ﺟﯽ ﺑﮭﺮ ﮐﮯ ﻋﺪﯾﻢ ﻣﯿﺮﯼ ﺁﻧﮑﮭﯿﮟ ﮨﮯ ﻭﮦ ﻣﯿﮟ ﺍﺱ ﮐﻮ ﺭﻻﺅﮞ ﮐﯿﺴﮯ
  5. ان کہے سوالوں کا درد کیسے ہوتا ہے تشنہ کام خواہشوں کی ٹھیس کیسے اٹھتی ہے بے زبان جذبوں کو جب سرا نہیں ملتا تشنگی سی رہتی ہے آسرا نہیں ملتا وہ بھی ان عذابوں سے کاش اس طرح گزرے کاش اس کی آنکھوں میں خواب بے ثمر اتریں کاش اس کی نیندوں میں رت جگے مسلسل ہوں باوجود خواہش کے ایسے سب سوالوں کا ربط توڑ آئے ہیں آج اس کے ہونٹوں پر لفظ چھوڑ آئے ہیں ....
×