Jump to content

Search the Community

Showing results for tags 'hath'.



More search options

  • Search By Tags

    Type tags separated by commas.
  • Search By Author

Content Type


Forums

  • Help Support
    • Announcement And Help
    • Funday Chatroom
  • Poetry
    • Shair-o-Shaa'eri
    • Famous Poet
  • Islam - اسلام
    • QURAN O TARJUMA قرآن و ترجمہ
    • AHADEES MUBARIK آحدیث مبارک
    • Ramazan ul Mubarik - رمضان المبارک
    • Deen O Duniya - دین و دنیا
  • Other Forums
    • Quizzes
    • Chitchat and Greetings
    • Urdu Adab
    • Entertainment
    • Common Rooms
  • Science, Arts & Culture
    • Education, Science & Technology
  • IPS Community Suite
    • IPS Community Suite 4.1
    • IPS Download
    • IPS Community Help/Support And Tutorials

Blogs

There are no results to display.

There are no results to display.

Categories

  • IPS Community Suite 4.3
    • Applications 4.3
    • Plugins 4.3
    • Themes 4.3
    • Language Packs 4.3
    • IPS Extras 4.3
  • IPS Community Suite 4
    • Applications
    • Plugins
    • Themes
    • Language Packs
    • IPS Extras
  • Books
    • Urdu Novels
    • Islamic
    • General Books
  • XenForo
    • Add-ons
    • Styles
    • Language Packs
    • Miscellaneous XML Files
  • Web Scripts
  • PC Softwares

Find results in...

Find results that contain...


Date Created

  • Start

    End


Last Updated

  • Start

    End


Filter by number of...

Joined

  • Start

    End


Group


Facebook ID


FB Page/Group URL


Bigo Live


Website URL


Instagram


Skype


Location


Interests

Found 6 results

  1. کب یاد میں تیرا ساتھ نہیں، کب ہاتھ میں تیرا ہاتھ نہیں صد شُکر کہ اپنی راتوں میں اب ہجر کی کوئی رات نہیں مشکل ہیں اگر حالات وہاں،دل بیچ آئیں جاں دے آئیں دل والو کوچہء جاناں میں، کیا ایسے بھی حالات نہیں جس دھج سے کوئی مقتل میں گیا،وہ شان سلامت رہتی ہے یہ جان تو آنی جانی ہے،اس جاں کی تو کوئی بات نہیں میدانِ وفا دربار نہیں ، یاں نام و نسب کی پوچھ کہاں عاشق تو کسی کا نام نہیں، کچھ عشق کسی کی ذات نہیں گر بازی عشق کی بازی ہے،جو چاہو لگا دو ڈر کیسا گرجیت گئے تو کیا کہنا، ہارے بھی تو بازی مات نہیں (فیض احمد فیض)
  2. Zarnish Ali

    main us kay hath na aoo

    میں اس کے ہاتھ نہ آؤں اور وہ میرا ہو کے رہے میں گر پڑوں تومیری پستیوں کا ساتھی ہو افتخارعارف دیار نور میں تیرہ شبوں کا ساتھی ہو کوئی تو ہو جو میری وحشتوں کا ساتھی ہو میں اس سے جھوٹ بھی بولوں تو مجھ سے سچ بولے میرے مزاج کے سب موسموں کا ساتھی ہو میں اس کے ہاتھ نہ آؤں اور وہ میرا ہو کے رہے میں گر پڑوں تومیری پستیوں کا ساتھی ہو وہ میرے نام کی نسبت سے معتبر ٹھہرے گلی گلی میری رسوائیوں کا ساتھی ہو کرے کلام مجھ سے تو میرے لہجے میں میں چپ رہوں تو میرے تیوروں کا ساتھی ہو میں اپنے آپ کو دیکھوں اور وہ مجھ کو دیکھے جائے وہ میرے نفس کی گمراہیوں کا ساتھی ہو وہ خواب دیکھے تو دیکھے میرے حوالے سے میرے خیال کے سب منظروں کا ساتھی ہو
  3. ایک دل تھا گنوائے بیٹھے ہیں اس لیے سر جھکائے بیٹھے ہیں دل میں دل دار آئے بیٹھے ہیں ہاتھ پر اُن کے تتلی بیٹھ گئی گل سبھی خار کھائے بیٹھے ہیں دستِ نازک پہ تتلی نے سوچا گل ، حنا کیوں لگائے بیٹھے ہیں رنگ اُڑا لے گئے وہ تتلی کا گل کی خوشبو چرائے بیٹھے ہیں شائبہ تک نہیں شرارت کا کیسی صورت بنائے بیٹھے ہیں اس سے بڑھ کر بھی کوئی ہے نازک؟ روشنی سے نہائے بیٹھے ہیں اس لیے پاؤں میں دباتا ہوں وہ مرا دل دبائے بیٹھے ہیں اس لیے مطمئن ہیں کوہِ گراں ہم امانت اٹھائے بیٹھے ہیں دوسرا موقع قیس کیسے ملے؟ ایک دل تھا گنوائے بیٹھے ہیں
  4. Ek Roz Tum Ne Thama Tha Hath Mera Mere Hath Se Tumhare Hath Ki Khushbu Nahi Jati Tum Bohat Pyar Se Pukarty Thy Naam Mera Mere Kaano Se Tumhari Wo Awaaz Nahi Jati Main Bulati Bhi Nahi Thi Aur Tum Aa Jaty Thy Ab Bulane Par Bhi Meri Awaaz Tum Tak Nahi Jati Bas Chuky Ho Tum Meri Nas Nas Mein Lahu Ki Tarha Meri Ulfat Tumhari Rooh Mein Utar Kyun Nahi Jati Main Jantani Hoon Yeh Sheher Yeh Rastay Tumhare Nahi Phir Bhi Mere Dil Se Intezar Ki Aadat Nahi Jati...
  5. دکھ کی لہر نے چھیڑا ھوگا یاد نے کنکر پھینکا ھوگا آج تو میرا دل کہتا ھے تو اس وقت اکیلا ھوگا میرے چومے ہوئے ہاتھوں سے اوروں کو خط لکھتا ھوگا بھیگ چلیں اب رات کی پلکیں تو اب تھک کے سویا ھوگا ریل کی گہری سیٹی سن کر رات کا جنگل گونجا ھوگا شہر کے خالی اسٹیشن پر کوئی مسافر اترا ھوگا آنگن میں پھر چڑیاں بولیں تو اب سو کر اٹھا ھوگا یادوں کی جلتی شبنم سے پھول سا مکھڑا دھویا ھوگا موتی جیسی شکل بنا کر آئینے کو تکتا ھوگا شام ہوئی اب تو بھی شاید اپنے گھر کو لوٹا ھوگا نیلی دھندلی خاموشی میں تاروں کی دھن سنتا ھوگا میرا ساتھی شام کا تارا تجھ سے آنکھ ملاتا ھوگا شام کے چلتے ہاتھ نے تجھ کو میرا سلام تو بھیجا ھوگا پیاسی کرلاتی کونجوں نے میرا دکھ تو سنایا ھوگا میں تو آج بہت رویا ھوں تو بھی شاید رویا ھوگا ناصر تیرا میت پرانا تجھ کو یاد تو آتا ھوگا۔۔
  6. ﮨﺎﺗﻬﮧ ﮨﺎﺗﻬﻮﮞ ﻣﯿﮟ ﺟﺐ ﺗﻤﮩﺎﺭﺍ ﺗﻬﺎ ﺧﻮﺍﺏ ﻭﮦ ﺯﻧﺪﮔﯽ ﺳﮯ ﭘﯿﺎﺭﺍ ﺗﻬﺎ ﻣﯿﮟ ﻧﮯ ﺩﯾﮑﻬﮯ ﺗﻬﮯ ﺧﻮﺍﺏ ﻣﯿﮟ ﺁﻧﺴﻮ ﯾﮧ ﺑﻬﯽ ﺷﺎﯾﺪ ﮐﻮﺋﯽ ﺍﺷﺎﺭﮦ ﺗﻬﺎ ﺟﻮ ﺍﺑﻬﯽ ﺁﺳﻤﺎﮞ ﺳﮯ ﭨﻮﭨﺎ ﮨﮯ ﻭﮦ ﻣﯿﺮﮮ ﺑﺨﺖ ﮐﺎ ﺳﺘﺎﺭﺍ ﺗﻬﺎ ﺗﻢ ﻣﺠﻬﮯ ﻏﯿﺮ ﮨﯽ ﺳﻤﺠﻬﮧ ﻟﯿﺘﮯ ﯾﮧ ﺳﺘﻢ ﺑﻬﯽ ﻣﺠﻬﮯ ﮔﻮﺍﺭﮦ ﺗﻬﺎ ﺍﮎ ﻗﺪﻡ ﺑﻬﯽ ﺑﮍﻫﺎ ﻧﮩﯿﮟ ﮐﻮﺋﯽ ﻣﯿﮟ ﻧﮯ ﮐﺲ ﺁﺱ ﺳﮯ ﭘﮑﺎﺭﺍ ﺗﻬﺎ ﮈﺭ ﺭﮨﺎ ﺗﻬﺎ ﺟﻮ ﺑﻬﯿﮍ ﺳﮯ ﻋﺎﻃﻒ ﺍﺱ ﮐﻮ ﺗﻨﮩﺎﺋﯿﻮﮞ ﻧﮯ ﻣﺎﺭﺍ ﺗﻬﺎ !!... ﻋﺎﻃﻒ ﺳﻌﯿﺪ —
×