Jump to content
Search In
  • More options...
Find results that contain...
Find results in...

Welcome to Fundayforum.com

Take a moment to join us, we are waiting for you.

Search the Community

Showing results for tags 'ibn e insha'.



More search options

  • Search By Tags

    Type tags separated by commas.
  • Search By Author

Content Type


Forums

  • Help Support
    • Announcement And Help
    • Funday Chatroom
  • Poetry
    • Shair-o-Shaa'eri
    • Famous Poet
  • Islam - اسلام
    • QURAN O TARJUMA قرآن و ترجمہ
    • AHADEES MUBARIK آحدیث مبارک
    • Ramazan ul Mubarik - رمضان المبارک
    • Deen O Duniya - دین و دنیا
  • Other Forums
    • Quizzes
    • Chitchat and Greetings
    • Urdu Adab
    • Entertainment
    • Common Rooms
  • Science, Arts & Culture
    • Education, Science & Technology
  • IPS Community Suite
    • IPS Community Suite 4.1
    • IPS Download
    • IPS Community Help/Support And Tutorials

Blogs

There are no results to display.

There are no results to display.

Categories

  • IPS Community Suite 4.3
    • Applications 4.3
    • Plugins 4.3
    • Themes 4.3
    • Language Packs 4.3
    • IPS Extras 4.3
  • IPS Community Suite 4
    • Applications
    • Plugins
    • Themes
    • Language Packs
    • IPS Extras
  • Books
    • Urdu Novels
    • Islamic
    • General Books
  • XenForo
    • Add-ons
    • Styles
    • Language Packs
    • Miscellaneous XML Files
  • Web Scripts
  • PC Softwares

Find results in...

Find results that contain...


Date Created

  • Start

    End


Last Updated

  • Start

    End


Filter by number of...

Joined

  • Start

    End


Group


Facebook ID


FB Page/Group URL


Bigo Live


Website URL


Instagram


Skype


Location


Interests

Found 4 results

  1. ہم رات بہت روئے، بہت آہ و فغاں کی دل درد سے بوجھل ہو تو پھر نیند کہاں کی اس گھر کی کھلی چھت پہ چمکتے ہوئے تارو کہتے ہو کبھی جا کے وہاں بات یہاں کی ؟ اللہ کرے میرؔ کا جنت میں مکاں ہو مرحوم نے ہر بات ہماری ہی بیاں کی ہوتا ہے یہی عشق میں انجام سبھی کا باتیں یہی دیکھی ہیں محبت زدگاں کی پڑھتے ہیں شب و روز اسی شخص کی غزلیں غزلیں یہ حکایات ہیں ہم دل زدگاں کی تم چرخِ چہارم کے ستارے ہوئے لوگو تاراج کرو زندگیاں اہلِ جہاں کی انشاؔ سے ملو، اس سے نہ روکیں گے وہ، لیکن اُس سے یہ ملاقات نکالی ہے کہاں کی مشہور ہے ہر بزم میں اس شخص کا سودا باتیں ہیں بہت شہر میں بدنام، میاں کی اے دوستو! اے دوستو! اے درد نصیبو گلیوں میں، چلو سیر کریں، شہرِ بتاں کی ہم جائیں کسی سَمت، کسی چوک میں ٹھہریں کہیو نہ کوئی بات کسی سود و زیاں کی انشاؔ کی غزل سن لو، پہ رنجور نہ ہونا دیوانا ہے، دیوانے نے اک بات بیاں کی
  2. waqas dar

    Shaher dil ki galiyun mai.

    شہرِ دل کی گلیوں میں شام سے بھٹکتے ہیں !چاند کے تمنائی بے قرار سودائی دل گداز تاریکی روح جاں کو ڈستی یے روح و جاں میں بستی ہے شہرِ دل کی گلیوں میں تاک شب کی بیلوں پر شبنمیں سر شکوں کی بے قرار لوگوں نے بے شمار لوگوں نے یاد گار چھوڑی ہے اتنی بات تھوڑی ہے صد ہزار باتیں تھیں حیلۂ شکیبائی صورتوں کی زیبائی قامتوں کی رعنائی ان سیاہ راتوں میں ایک بھی نہ یاد آئی جا بجا بھٹکتے ہیں کس کی راہ تکتے ہیں چاند کے تمنائی یہ نگر کبھی پہلے اس قدر نہ ویراں تھا کہنے والے کہتے ہیں قریہ نگاراں تھا خیر اپنے جینے کا یہ بھی ایک ساماں تھا آج دل میں ویرانی ابر بن کے گھر آئی آج دل کو کیا کہیے با وفا نہ ہرجائی پھر بھی لوگ دیوانے آ گئے ہیں سمجھانے اپنی وحشت دل کے بن لیے ہیں افسانے خوش خیال دنیا نے گرمیاں تو جاتی ہیں وہ رتیں بھی آتیں ہیں جب ملول راتوں میں دوستوں کی باتوں میں جی نہ چین پائے گا اور اوب جائے گا آہٹوں سے گونجے گی شہرِ دل کی پہنائی اور چاند راتوں میں چاندنی کے شیدائی ہر بہانے نکلیں گے آزمانے نکلیں گے آرزو کی گہرائی ڈھونڈنے کو رسوائی سرد سرد راتوں کو زرد چاند بخشے گا بے حساب تنہائی بے حجاب تنہائی !!!شہرِ دل کی گلیوں میں ابنِ انشاء
  3. Sab MayA hAi Sab Dhalti Phirtii Chaya hAi Is Ishq Mein hUm Ney jO khOya jO Paya hAi jO tUm Ney Kha "Faiz" Ney Jo Farmaya hAi Sab MayA hAi Haan Gahay Gahay Deed Ki dOulat Haath Aaii Ya Eik Wo Lazat nAam hAi Jis Ka rUSwaii Bus Is K Siwa To jO Bhe Sawaab KamayA hAi Sab MayA hAi Eik nAam To baQii Rehta hAi Gar jAan Nhien jAb Dekh Leya Is SOuday Mein NuQsAan Nhien Tab Shama Pey jAan Dainay Patanga AayA hAi Sab MayA hAi malOom Hamein Sab "Qais" Miyaan Ka QiSsa Bhe Sab Eik Sey hAin Yeh Ranjha Bhe Yeh "InSha" Bhe Farhaad Bhe Jo Eik Nehar Sii khOud K LayA hAi Sab MayA hAi kyOu dArd K Namay Likhtay Likhtay Raat Karo Jis Saat Samandar Paar Ki Naar Ki Baat Karo Us Naar Sey kOii Eik Ney dhOka KhayA hAi Sab MayA hAi Jis gOrii Par Hum Eik Ghazal Har Shaam Likhien Tum jAntay hO , hUm kyOu Kar Us Ka nAam Likhien Dil Us Ki Bhe Chokhat ChOom Ka Wapis AayA hAi Sab MayA hAi Wo Larki Bhe Jo Chand Nagar Kii Ranii Thii Wo Jis Ki Alhar AankhOun Mein KhaiRanii Thii Aaj Us Ney Bhe PaiGham Yahii BhijwayA hAi Sab MayA hAi Jo Abhe Tak nAam Waffa Ka Laitay hAin Wo jAan K dhOkay Khatay dhOkay Daitay hAin Haan Tho'k Baja Kar hUm Ney hUkam LagayA hAi Sab MayA hAi Jab Dekh Leya Har Shakhs Yhaan HarjAii hAi Is Sehar Sey dOor , Eik Kutya hUm Ney Banaii hAi Or Us Kutya K Mathay Par LikhwayA hAi Sab MayA hAi By: Ibne Insha [dil.e.wehshi]
  4. فرض کرو ہم اہلِ وفا ہوں فرض کرو ہم اہلِ وفا ہوں، فرض کرو دیوانے ہوں فرض کرو یہ دونوں باتیں جھوٹی ہوں افسانے ہوں فرض کرو یہ جی کی بپتا جی سے جوڑ سنائی ہو فرض کرو ابھی اور ہو اتنی،آدھی ہم نے چھپائی ہو فرض کرو تمھیں خوش کرنے کے ڈھونڈے ہم نے بہانے ہوں فرض کرو یہ نین تمھارے سچ مچ کے میخانے ہوں فرض کرو یہ روگ ہو جھوٹا، جھوٹی پیت ہماری ہو فرض کرو اس پیت کے روگ میں سانس بھی ہم پہ بھاری ہو فرض کرو یہ جوگ بجوگ کا ہم نے ڈھونگ رچایا ہو فرض کرو بس یہی حقیقت، باقی سب کچھ مایا ہو
×