Jump to content
Search In
  • More options...
Find results that contain...
Find results in...

Search the Community

Showing results for tags 'khayal'.



More search options

  • Search By Tags

    Type tags separated by commas.
  • Search By Author

Content Type


Forums

  • Help Support
    • Announcement And Help
    • Funday Chatroom
  • Poetry
    • Shair o Shairy
    • Famous Poet
  • Islam - اسلام
    • QURAN O TARJUMA قرآن و ترجمہ
    • AHADEES MUBARIK آحدیث مبارک
    • Ramazan ul Mubarik - رمضان المبارک
    • Deen O Duniya - دین و دنیا
  • Other Forums
    • Quizzes
    • Movies and Stars
    • Chit chat And Greetings
    • Urdu Adab
    • Entertainment
    • Common Rooms
  • Science, Arts & Culture
    • Education, Science & Technology
  • IPS Community Suite
    • IPS Community Suite 4.1
    • IPS Download
    • IPS Community Help/Support And Tutorials

Blogs

There are no results to display.

There are no results to display.

Categories

  • IPS Community Suite 4.5
    • Applications 4.5
    • Plugin 4.4 Copy
    • Themes/Ranks Copy
    • IPS Languages 4.4 Copy
  • IPS Community Suite 4.4
    • Applications 4.4
    • Plugin 4.4
    • Themes/Ranks
    • IPS Languages 4.4
  • IPS Community Suite 4.3
    • Applications 4.3
    • Plugins 4.3
    • Themes 4.3
    • Language Packs 4.3
    • IPS Extras 4.3
  • IPS Community Suite 4
    • Applications
    • Plugins
    • Themes
    • Language Packs
    • IPS Extras
  • Books
    • Urdu Novels
    • Islamic
    • General Books
  • XenForo
    • Add-ons
    • Styles
    • Language Packs
    • Miscellaneous XML Files
  • Web Scripts
  • PC Softwares
  • Extras

Categories

  • Islamic
  • WhatsApp Status
  • Funny Videos
  • Movies
  • Songs
  • Seasons
  • Online Channels

Find results in...

Find results that contain...


Date Created

  • Start

    End


Last Updated

  • Start

    End


Filter by number of...

Joined

  • Start

    End


Group


Facebook ID


FB Page/Group URL


Bigo Live


Website URL


Instagram


Skype


Interests


Location


ZODIAC

Found 5 results

  1. کب اس کا وصال چاہیے تھا بس اک خیال چاہیے تھا کب دل کو جواب سے غرض تھی ہونٹوں کو سوال چاہیے تھا شوق اک نفس تھا اور وفا کو پاسِ مہ و سال چاہیے تھا اک چہرہِ سادہ تھا جو ہم کو بے مثل و مثال چاہیے تھا اک کرب میں ذات و زندگی میں ممکن کو مُحال چاہیے تھا میں کیا ہوں بس اک ملالِ ماضی اس شخص کو حال چاہیے تھا ہم تم جو بچھڑ گئے ہیں ہم کو کچھ دن تو ملال چاہیے تھا وہ جسم ، جمال تھا سراپا اور مجھ کو جمال چاہیے تھا وہ شوخِ رمیدہ مجھ کو اپنی بانہوں میں نڈھال چاہیے تھا تھا وہ جو کمال' شوقِ وصلت خواہش کو زوال چاہیے تھا جو لمحہ بہ لمحہ مل رہا ہے وہ سال بہ سال چاہیے تھا جون_ایلیاء
  2. ﮐﺒﮭﯽ ﺗﻤﻨﺎ ﮐﮯ ﺭﺍﺳﺘﻮﮞ ﭘﺮ ﻧﮑﻞ ﭘﮍﻭ ﺗﻮ ﺧﻴﺎﻝ ﺭﮐﮭﻨﺎ ﮨﻮﺍﺋﯿﮟ ، ﺑﺎﺩﻝ ، ﻓﻀﺎﺋﯿﮟ ، ﻣﻮُﺳﻢ ، ﺧﻴﺎﻝ ﭼﮩﺮﮮ ﺑﺪﻝ ﺑﺪﻝ ﮐﺮ ﺗُﻤﮭﯿﮟ ﻣﻠﯿﮟ ﮔﮯ ﺗﻮ ﻟﻤﺤﮧ ﻟﻤﺤﮧ ﺑﺪﻟﺘﮯ ﺭﻧﮕﻮﮞ ﮐﮯ ﺷﻮﺥ ﺩﮬﻮﮐﮯ ﻣﯿﮟ ﺁ ﻧﮧ ﺟﺎﻧﺎ ﮐﺒﮭﯽ ﺟﻮ ﭼﺎﺭﻭﮞ ﻃﺮﻑ ﺗﻤﮩﺎﺭﮮ ﮐِﺮﻥ ﮐِﺮﻥ ﺍﭘﻨﺎ ﺧﻮﺍﺏ ﺁﺳﺎ ﺑﺪﻥ ﻧِﮑﮭﺎﺭﮮ ﺯﻣﯿﻦ ﭘﮧ ﺍﺗﺮﮮ ﺗﻮ ﺩُﮬﻨﺪﻟﮑﻮﮞ ﻣﯿﮟ ﺳﻤﺎ ﻧﮧ ﺟﺎﻧﺎ ﮐﺒﮭﯽ ﺟﻮ ﺁﻧﮑﮭﻮﮞ ﻣﯿﮟ ﭼﺎﻧﺪ ﮨﻨﺲ ﮨﻨﺲ ﮐﮯ ﭼﺎﻧﺪﻧﯽ ﮐﺎ ﺧُﻤﺎﺭ ﺑﮭﺮ ﺩﮮ ﺗﻮ ﺍﭘﻨﯽ ﺁﻧﮑﮭﯿﮟ ﮐﮩﯿﮟ ﺧﻼ ﻣﯿﮟ ﮔﻨﻮﺍ ﻧﮧ ﺁﻧﺎ ﮐﮧ ﯾﮧ ﻧﮧ ﮨﻮ ﭘﮭﺮ ﺟﻮ ﺧﻮﺍﺏ ﭨﻮﭨﮯ ﺩﮬﻨﮏ ﺩﮬﻨﮏ ﮐﺎ ﺳﺮﺍﺏ ﭨﻮﭨﮯ ﺗﻮ ﺟِﺴﻢ ﻭ ﺟﺎﮞ ﭘﺮ ﻋﺬﺍﺏ ﭨﻮﭨﮯ ﺍﻭﺭ ﺗُﻢ ﺑﻤﺸﮑﻞ ﻟﺮﺯﺗﮯ ﮨﺎﺗﮭﻮﮞ ﻣﯿﮟ ﮐﺮﭼﯽ ﮐﺮﭼﯽ ﺑﺪﻥ ﺳﻨﺒﮭﺎﻟﮯ ﮐﮩﯿﮟ ﺑُﻠﻨﺪﯼ ﭘﺮ ﭼﮍﮪ ﮐﮯ ﺭِﺳﺘﯽ ﮨﻮﺋﯽ ﻧﮕﺎﮨﻮﮞ ﺳﮯ ﻭﺍﭘﺴﯽ ﮐﮯ ﻧِﺸﺎﻥ ﮈﮬﻮﻧﮉﻭ ﺍﺟﮍ ﮔﻴﺎ ﺟﻮ ﺟﮩﺎﮞ ﮈﮬﻮﻧﮉﻭ ﮐﺒﮭﯽ ﺗﻤﻨﺎ ﮐﮯ ﺭﺍﺳﺘﻮﮞ ﭘﺮ ﻧﮑﻞ ﭘﮍﻭ ﺗﻮ ﺧﻴﺎﻝ ﺭﮐﮭﻨﺎ ﮐﮩﯿﮟ ﺳﮯ ﺧﺎﻟﯽ ﭘﻠﭧ ﮐﮯ ﺁﻧﺎ ﺑﮩﺖ ﮐﭩﮭﻦ ﮨﮯ ﺑﮩﺖ ﮐﭩﮭﻦ ﮨﮯ .....
  3. (تجھے یاد ہے اسی ریت پر) میں ہوں جس مکان کی چھت تلے مرا گھر نہیں ترا نام درج ہے جس جگہ ترا در نہیں تجھے یاد ہے کسی شام ہم نے بنایا تھا کہیں ایک چھوٹا سا ریت گھر اُسی ریت سے اُسی ریت پر (اُسی ریت پر جو تھی راہ میں کسی موج کے کبھی اپنے ہونے کے دھیان میں کبھی معجزوں کے گمان میں) ہمیں علم تھا ہمیں علم تھا کہ وہ ریت گھر جو تھے منتظر کسی موج کے انہیں ٹوٹ جانے سے روکنے کا خیال امرِ محال ہے اسی موج و ریگ کے کھیل سے ہی بحال ہے وہ تلازمہ وہی رابطہ، جسے ماننے کے فشار میں رہِ آگہی کے سراب بھی سبھی خواب بھی اسی ایک لمحۂ مختصر کے حصار میں ہے گھرا ہوا خطِ ریگ بھی کفِ آب بھی پہ یہ داستاں تو تھی ترجماں کسی کھیل کی اُسی کھیل کی جسے کھیلتے ہمیں آلیاکسی رات نے اُسی رات نے جسے اپنے خوں سے جواں کیا مرے شوق نے ترے ساتھ نے کسی ان چھوئے سے خیال نے کسی دور ہوتی سی بات نے تجھے یاد ہے مجھے یاد ہے وہ جو بات کی بڑی دیر تک مرے ہاتھ سے ترے ہاتھ نے کہاں تھا گُماں، کسے تھی خبر جو کہا تھا شوق کی لہر نے جو لکھا ریت کی لوح پر اُسی ایک شام کا کھیل تھا اُسی ایک پل کا جمال تھا اُسی کھیل میں اُسی شام کو وہ جو ریت گھر سے بکھر گئے وہ جو ایک پل میں اُجڑ گئے مرے خواب تھے ترے خواب تھے امجد اسلام امجد
×
×
  • Create New...