Jump to content
Search In
  • More options...
Find results that contain...
Find results in...
Sign in to follow this  
Safa Marwa

poetry بے چین امنگوں کو بہلا کے چلے جانا

Rate this topic

Recommended Posts

بے چین امنگوں کو بہلا کے چلے جانا
ہم تم کو نہ روکیں گے بس آکے چلے جانا

ملنے جو نہ آئے تم، تھی کون سی مجبوری
جھوٹا کوئی افسانہ، دہرا کے چلے جانا

جو آگ لگی دل میں ، وہ سرد نہ ہوجائے
بجھتے ہوئے شعلوں کو بھڑکا کے چلے جانا

اُجڑی نظر آتی ہے جذبات کی ہریالی
تم اس پہ کوئی بادل برسا کے چلے جانا

فرقت کی اذیت میں کچھ صبر بھی لازم ہے
یہ بات مرے دل کو سمجھا کے چلے جانا

شاید کہ بہل جائے ، دیوانہ قتیل اس سے
تم کوئی نیا وعدہ فرما کے چلے جانا

قتیل شفائی

 

16939027_1269855373063641_4444193362108769021_n.jpg

Share this post


Link to post
Share on other sites
Admin

میں بتاؤں گا اسے زخم کی لذت کیا ہے

پھول کا مجھ سے تعارف تو کرایا جائے

قتیل شفائی

Share this post


Link to post
Share on other sites

Join the conversation

You can post now and register later. If you have an account, sign in now to post with your account.
Note: Your post will require moderator approval before it will be visible.

Guest
Reply to this topic...

×   Pasted as rich text.   Paste as plain text instead

  Only 75 emoji are allowed.

×   Your link has been automatically embedded.   Display as a link instead

×   Your previous content has been restored.   Clear editor

×   You cannot paste images directly. Upload or insert images from URL.

Sign in to follow this  

  • Recently Browsing   0 members

    No registered users viewing this page.

  • Forum Statistics

    2,121
    Total Topics
    8,949
    Total Posts
×
×
  • Create New...