Jump to content

Welcome to Fundayforum. Please register your ID or get login for more access and fun.

Signup  Or  Login

house fdf.png

ADMIN ADMIN

Captain Marvel Movie 2019

IMDb - 6.3/10 Rotten Tomatoes Description: Captain Marvel gets caught in the middle of a galactic war between two alien races. Initial release: March 8, 2019 (USA) Directors: Anna Boden, Ryan Fleck Budget: 152 million USD Music composed by: Pinar Toprak Screenplay: Anna Boden, Ryan Fleck, Nicole Perlman, Geneva Robertson-Dworet, Meg LeFauve, Liz Flahive, Carly Mensch
Watch and Download

Alita - Battle Angel 2019

IMDb: 7.6/10 Genre : Action, Science Fiction, Thriller, Romance Director : Robert Rodriguez Stars : Rosa Salazar, Christoph Waltz, Ed Skrein, Mahershala Ali, Jennifer Connelly LANGUAGE: Hindi (Cleaned) – English Quality: 720p HD-Camrip PLOT: Six strangers find themselves in a maze of deadly mystery rooms, and must use their wits to survive.
Watch and Download
waqas dar

Gaye dino ka suragh le ker kidher se aya kidher gaya wo

Recommended Posts

گئے دِنوں کا سراغ لے کر ، کِدھر سے آیا کِدھر گیا وہ 
عجیب مانوس اجنبی تھا ، مجھے تو حیران کر گیا وہ 

بس ایک موتی سی چھب دِکھا کر 
بس ایک میٹھی سی دُھن سُنا کر 
ستارہء شام بن کے آیا ، برنگِ خُوابِ سحر گیا وہ 

خوشی کی رُت ہو کہ غم کا موسم 
نظر اُسے ڈُھونڈتی ہے ہر دٙم 
وُہ بُوئے گل تھا کہ نغمہء جاں ، مرے تو دل میں اُتر گیا وہ 

نہ اب وُہ یادوں کا چڑھتا دریا 
نہ فرصتوں کی اُداس برکھا 
یُونہی ذرا سی کسک ہے دِل میں ، جو زخم گہرا تھا بھر گیا وہ 

کچھ اب سنبھلنے لگی ہے جاں بھی 
بدل چلا دٙورِ آسماں بھی 
جو رات بھاری تھی ٹل گئی ہے ، جو دِن کڑا تھا گزر گیا وہ

بس ایک منزل ہے بوالہوس کی 
ہزار راستے ہیں اہلِ دل کے 
یہی تو ہے فرق مجھ میں ، اس میں گزر گیا میں ، ٹھہر گیا وہ 

شکستہ پا راہ میں کھڑا ہوں 
گئے دِنوں کو بُلا رہا ہوں 
جو قافلہ میرا ہمسفر تھا ، مثالِ گردِ سفر گیا وہ 

میرا تو خون ہو گیا ہے پانی 
سِتمگروں کی پلک نہ بھیگی 
جو نالہ اُٹھا تھا رات دِل سے ، نہ جانے کیوں بے اٙثر گیا وہ 

وہ میکدے کو جگانے والا 
وہ رات کی نیند اُڑانے والا 
یہ آج کیا اُس کے جی میں آئی ، کہ شام ہوتے ہی گھر گیا وہ 

وہ ہجر کی رات کا ستارہ 
وہ ہم نفس ہم سُخن ہمارا 
سدا رہے اُس کا نام پیارا ، سُنا ہے کل رات مٙر گیا وہ 

وہ جس کے شانے پہ ہاتھ رکھ کر 
سفر کیا تُو نے منزلوں کا 
تری گلی سے نہ جانے کیوں آج ، سٙر جُھکائے گزر گیا وہ 

وہ رات کا بے نوا مسافر 
وہ تیرا شاعر ، وہ تیرا ناصر 
تیری گلی تک تو ہم نے دیکھا تھا ، پھر نہ جانے کِدھر گیا وہ 
*****
*****
شاعر : ناصر کاظمی 
(دیوان)

 

dewan.jpg

Share this post


Link to post
Share on other sites

Create an account or sign in to comment

You need to be a member in order to leave a comment

Create an account

Sign up for a new account in our community. It's easy!

Register a new account

Sign in

Already have an account? Sign in here.

Sign In Now

  • Recently Browsing   0 members

    No registered users viewing this page.

  • Forum Statistics

    2,013
    Total Topics
    8,761
    Total Posts
×