Jump to content
Search In
  • More options...
Find results that contain...
Find results in...
Sign in to follow this  
waqas dar

atbaf abrak کبھی خوابوں پہ مرتا ہوں، کبھی تعبیر مارے ہے

Rate this topic

Recommended Posts

Admin

کبھی خوابوں پہ مرتا ہوں، کبھی تعبیر مارے ہے
کبھی تدبیر سے مرتا، کبھی تقدیر مارے ہے
ہوس ہے میرے اندر کی جو مجھ کو ہے دغا دیتی
کبھی پانے کی حسرت تو کبھی تسخیر مارے ہے
کبھی سوچوں بھلا ہے یہ، کبھی سوچوں کہ وہ اچھا
انہی سوچوں میں گم اکثر مجھے تاخیر مارے ہے
عجب فطرت ہے انساں کی وہ چاہے جو نہیں ہوتا
کبھی زندان کی خواہش، کبھی زنجیر مارے ہے
بنے یکتا یگانہ یہ، نہیں کچھ ہاتھ میں اس کے
کبھی لشکر پہ حاوی ہے، کبھی اک تیر مارے ہے
فنا ہونا ہی قسمت ہے، بدلنا جس کا ناممکن 
نہ پیتا زہر جو ظالم اسے اکسیر مارے ہے
کتابوں میں لکھے قصے، بتاتے ہیں مجھے فاتح
جو اپنا حال اب دیکھوں تو وہ تحریر مارے ہے
محبت بھی ہے اک پھندا، نہ جس سے کوئی بچ پایا
وہ جو اپنوں سے بچ جائے اسے رہگیر مارے ہے
ہے جینا شاعروں کا کیا، یہ بھی تو جان رکھ ابرک
 کبھی گمنام مرتے ہیں، کبھی تشہیر مارے ہے

اتباف ابرک

 

Doubt-Kills-More-Dreams-than-Failure-Ever-Will.png

Share this post


Link to post
Share on other sites

Join the conversation

You can post now and register later. If you have an account, sign in now to post with your account.
Note: Your post will require moderator approval before it will be visible.

Guest
Reply to this topic...

×   Pasted as rich text.   Paste as plain text instead

  Only 75 emoji are allowed.

×   Your link has been automatically embedded.   Display as a link instead

×   Your previous content has been restored.   Clear editor

×   You cannot paste images directly. Upload or insert images from URL.

Sign in to follow this  

  • Recently Browsing   0 members

    No registered users viewing this page.

  • Forum Statistics

    2,108
    Total Topics
    8,935
    Total Posts
×
×
  • Create New...