Jump to content
Search In
  • More options...
Find results that contain...
Find results in...
Sign in to follow this  
ROHAAN

poetry آنکھ میں خواب نہیں

Rate this topic

Recommended Posts

feeling-283716.jpg


آنکھ میں خواب نہیں
 

آنکھ میں خواب نہیں خواب کا ثانی بھی نہیں
کنج لب میں کوئی پہلی سی کہانی بھی نہیں

 

ڈھونڈھتا پھرتا ہوں اک شہر تخیل میں تجھے
اور مرے پاس ترے گھر کی نشانی بھی نہیں

 

بات جو دل میں دھڑکتی ہے محبت کی طرح
اس سے کہنی بھی نہیں اس سے چھپانی بھی نہیں

 

آنکھ بھر نیند میں کیا خواب سمیٹیں کہ ابھی
چاندنی رات نہیں رات کی رانی بھی نہیں

 

لیلی حسن ذرا دیکھ ترے دشت نژاد
سر بسر خاک ہیں اور خاک اڑانی بھی نہیں

 

کچے ایندھن میں سلگنا ہے اور اس شرط کے ساتھ
تیز کرنی بھی نہیں آگ بجھانی بھی نہیں

 

اب تو یوں ہے کہ ترے ہجر میں رونے کے لئے
آنکھ میں خون تو کیا خون سا پانی بھی نہیں

Share this post


Link to post
Share on other sites

Share this post


Link to post
Share on other sites
Author of the topic Posted
1 hour ago, Hareem Naz said:

Very nice

🌻 پسند کرنے کا بہت بہت شکریہ 🌻

2 hours ago, Hareem Naz said:

Very nice

 

Share this post


Link to post
Share on other sites
Admin

umdaaaa bahtreen

Share this post


Link to post
Share on other sites

Join the conversation

You can post now and register later. If you have an account, sign in now to post with your account.
Note: Your post will require moderator approval before it will be visible.

Guest
Reply to this topic...

×   Pasted as rich text.   Paste as plain text instead

  Only 75 emoji are allowed.

×   Your link has been automatically embedded.   Display as a link instead

×   Your previous content has been restored.   Clear editor

×   You cannot paste images directly. Upload or insert images from URL.

Sign in to follow this  

  • Recently Browsing   0 members

    No registered users viewing this page.

  • Forum Statistics

    2,108
    Total Topics
    8,935
    Total Posts
×
×
  • Create New...