Jump to content

Please Disable Your Adblocker. We have only advertisement way to pay our hosting and other expenses.  

FDF Members Poetry

  • entries
    159
  • comments
    114
  • views
    22,465

Contributors to this blog

Shakayat nh koi zindagi se

Hareem Naz

127 views

 

یہ شیشے یہ سپنے یہ رشتے یہ دھاگے
کسے کیا خبر ہے کہاں ٹوٹ جائیں

محبت کے دریا میں .."تنکے وفا " کے
نہ جانے یہ کس موڑ پر ڈوب جائیں..

عجب دل کی بستی عجب دل کی وادی
ہر اک موڑ موسم نئی خواہشوں کا
لگائے ہیں ہم نے بھی سپنوں کے پودے

مگر کیا بھروسہ یہاں بارشوں کا"

مرادوں کی منزل کے سپنوں میں کھوئے
محبت کی راہوں پہ ہم چل پڑے تھے
ذرا دور چل کے جب آنکھیں کھلیں تو

کڑی دھوپ میں ہم اکیلے کھڑے تھے

جنہیں دل سے چاہا جنہیں دل سے پوجا
نظر آرہے ہیں وہی "اجنبی سے"
"روایت ہے شاید یہ صدیوں پرانی

"شکایت نہیں ہے کوئی____ زندگی سے"...!!

 

  • Like 1


0 Comments


Recommended Comments

There are no comments to display.

Create an account or sign in to comment

You need to be a member in order to leave a comment

Create an account

Sign up for a new account in our community. It's easy!

Register a new account

Sign in

Already have an account? Sign in here.

Sign In Now
×